دعوتِ دین کا کام امت کے افراد کی ذمہ داری ہے ۔ ڈاکٹر سہیل حسن

راولپنڈی (ابوافنان اورکزئی) تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز راولپنڈی آرٹس کونسل میں داعی اسلام علامہ نوراللہ رشیدی صاحب کی نئی کتاب اورہفت روزہ صدائے اسلام آباد کی تقریب رونمائی کا انعقاد ہوا۔
جس میں ملک بھر سے تمام مسالک کے ممتازعلماء کرام نے کثیرتعدادمیں شرکت کی۔ پروگرام کے مہمانان خصوصی میں الدعوہ اکیڈمی اسلام آباد کے ڈائریکٹر جنرل ڈاکٹرپروفیسر سہیل حسن صاحب، ممتاز عالم دین نثاراحمدالحسینی، علامہ ایازظہیرھاشمی صاحب، نوجوان ادیب،اسکالرمفتی کریم اختراورکزئی صاحب شامل تھے۔
پروگرام سے خطاب کرتے ہوئے مہمان خصوصی ڈاکٹرپروفیسر سہیل حسن نے کہاکہ ہماراعقیدہ ہے کہ پیغمبرِ اسلام صلی اللہ علیہ وسلم خاتم النبین ہیں اور آپکے بعد کوئی نبی نہیں آئے گا

تو اب اشاعتِ دین اوردعوتِ دین کا کام امت کے افراد کی ذمہ داری ہے۔انہوں نے کہا الحمد للہ! اللہ تعالیٰ نے اپنے بندوں میں سے ایسے افرادمنتخب کرلیے ہیں جوتبلیغ دین کواپنامشن بنائے ہیں، یہ کام صرف اللہ کی رضاکے لیے کرنے میں مصروف ہیں انہی شخصیات میں مولانا نور اللہ رشیدی صاحب کا کام شامل ہے جوخاموشی سے اس کام میں لگے ہوئے ہیں۔
علامہ ایازظہیرھاشمی نے اپنے خطاب میں کہا کہ نور اللہ رشیدی صاحب جیسے

 افراد ہمارے لیے سرمایہ افتخار ہیں۔ ۔ نقشیبندی سلسلے کے عظیم رہنما مولانا عبدالشکور نقشبندی نے کہاکہ علامہ رشیدی صاحب صرف ظاہری

 دعوت نہیں دیتے بلکہ مولانا موصوف تصوف میں بھی بلندمقام رکھتے ہیں۔

پاکستان علماء کونسل اسلام آباد کے امیر مولانا عبد الحمید صابری نے کہاکہ صرف بیانات

 کے حدتک ہمیں ساتھ دینے کی بات نہیں کرنی چاہیے بلکہ عملی طور پر انکا ساتھ دینا چاہیے۔نوجوان سکالر مفتی کریم اختراورکزئی سٹیج سیکرٹری کے فرائض سرانجام دیتے ہوئے کہا کہ علامہ رشیدی صاحب کاغیر مسلموں کو دعوتِ دین دینا اور انکے ہاتھوں پر 1686 افراد کا داخل اسلام ہونا واقعی قابل تحسین ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ میں دل کی گہرائیوں سے اس کتاب کی تدوین پر علامہ رشیدی کوخراج تحسین پیش کرتا ہوں، پروگرام اسلام آباد کے مشہور شیخ الحدیث مولانا عبدالرؤف صاحب کی دعا پر اختتام پذیر ہوا۔

(Visited 21 times, 1 visits today)

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *