کالم / بلاگ

انصاف یا مک مکا سانحہ ساہیوال ۔۔۔ تحریر : محمد محی الدین باہو ۔ پیرمحل

سانحہ ساہیوال،، کا عدالتی فیصلہ سانحہ ماڈل ٹاؤن کے جیسا ہی ہوا ہے یا پھر انصاف ہوا ہے سانحہ ساہیوال مقدمہ میں عدالت نے تمام ملزمان کو شک کا فائدہ دیتے ہوئے رہا کر دیا ہے جب ریاست پاکستان کے

تین نو عمر لڑکیوں کے اغوا کا وقوعہ ۔ حقیقت یا افسانہ

چیچہ وطنی سے۔مقصود احمد سندھو کی کرائم ڈائری ملک کے مختلف شہروں اور علاقوں سے آئے روز مختلف جرائم کے واقعات اور خبریں سننے کو ملتی رہتی ہیں۔ ان میں سے کچھ اکثر حیرت اور صدمے والی ہوتی ہیں جو بعد

سکول و کالج کے ہم جماعتوں کے ساتھ چند یادگار ساعتیں ۔۔۔ تحریر : ابنِ ریاض

جس زمانے میں ہم نے ایف ایس سی کی اس زمانے میں موبائل کا تصور ہی نہ تھا بلکہ ٹیلی فون بھی ہر گھر میں عام نہ تھا۔ محلے میں دو چار گھروں میں ٹیلی فون ہواکرتا تھا اور اس

ایک نقطے نے محرم سے مجرم کر دیا ۔۔۔ تحریر : ابنِ ریاض

ہمارے لڑکپن تک پاکستان میں ایک ہی ٹی وی چینل یعنی سرکاری ٹی وی تھا۔ علاوہ ازیں دیہات میں ریڈیو بھی عام تھا۔ ٹی وی پر سرکار کا مکمل قابو تھا۔ ان اداروں پر پڑھے لکھے اور سمجھدار لوگ تھے

بھاگتے چور کی لنگوٹی ہی سہی ۔۔۔ تحریر : ابنِ ریاض

گروپ میں اس پر مضمون لکھنے کا مقابلہ ہو رہا ہے۔ مقابلوں میں تو ہم حصہ ّ نہیں لیتے جس کی وجہ آپ کو معلوم ہے۔ قلم یعنی تختہ کنجی چونکہ کافی عرصے سے خاموش ہے تو سوچا کہ کیوں

صفر المظفر کی عبادت ومعمولات ۔۔۔ تحریر : حافظ کریم اللہ چشتی، پائی خیل، میانوالی

اللہ رب العزت نے سال کے بارہ مہینوں میں مختلف دنوں اورراتوں کی خاص اہمیت وفضیلت بیان کر کے ان کی خاص خاص برکات وخصوصیات بیان فرمائی ہیں قرآن حکیم میں ارشادباری تعالیٰ ہے۔”بے شک مہینوں کی گنتی اللہ کے

گدھے تو گدھے ہیں مینڈک بھی نہ چھوڑے ہم نے ۔۔۔ تحریر : ابنِ ریاض

با وثوق ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ لاہوریوں کو اب مینڈک کھلائے جا رہے ہیں۔ اس سے پہلے گدھے کھانے کا اعزاز بھی لاہور والوں کو ہی حاصل ہے۔ واقعی جس نے لاہور نے دیکھا وہ پیدا ہی نہیں

پکے پکائے دانشور ۔۔۔ تحریر : مسز جمشید خاکوانی

موجودہ دور پروپیگنڈہ جنگ کا ہے جو ملک جتنا زیادہ شور مچاتا ہے جتنا ڈھٹائی سے جھوٹ بولتا ہے جتنا زیادہ واویلا کرتا ہے دنیا اس کو سچا مان لیتی ہے اور اس کے دشمن کو دہشت گرد مان کر

امام حسینؓ اور ہم ۔۔۔ تحریر : حافظ امیرحمزہ سانگلہ ہل

رب العزت نے جب سے اسلامی مہینوں کا آغاز فرمایا ہے اسی وقت سے چار مہینے حرمت والے بنائے ہیں اور وہ ذوالقعدہ،ذوالحجہ،محرم اور رجب ہیں ان میں سے ماہ محرم الحرام جو کہ رواں دواں ہے اس مہینے میں

جادوگر گیند باز ۔۔۔ تحریر : ابنِ ریاض

اسی کی دہائی کے وسط میں جب ہم نے کرکٹ دیکھنی شروع کی تو پاکستان ٹیم میں عموماً مرد بحران اکثر عمران خان، جاوید میانداد اورعبدالقادر میں سے کوئی ہوتا تھا۔عمران خان کپتان و آل راؤنڈر، جاوید میانداد بلے بازی

شادی ہمارے بھائی کی ۔۔۔ تحریر : ابنِ ریاض

اس برس کے ابتدامیں ہی ہمیں گھر والوں نے بتا دیا تھا کہ چھوٹے بھائی کی شادی کرنی ہے۔ طے یہ پایا کہ ہماری تعطیلات کے دوران ہی اس فرض سے سبکدوش ہونا ہے۔ ہم نے بزرگوں کو بہت سمجھایا

ایٹمی جنگ کی دھمکیاں امن نہیں کولڈوار ہیں ۔۔۔ تحریر : سید سردار احمد پیرزادہ

انسانوں کی طرح جنگوں کی بھی بہت سی اقسام ہیں۔ انہی میں سے ایک ”کولڈوار“ ہے جس کا ذکر سوویت یونین کے خاتمے سے پہلے بہت عام تھا۔ جونہی سوویت یونین ڈوبا، لوگوں نے سمجھ لیا کہ کولڈوار کا زمانہ

کشمیر کے لیے نیت اخلاص چاہیے ۔۔۔ تحریر : مسز جمشید خاکوانی

گورنر نجم الدین ایوب کافی عمر ہونے تک شادی سے انکار کرتے رہے ایک دن اس کے بھائی اسد الدین شیر کوہ نے اس سے کہا بھائی تم شادی کیوں نہیں کرتے؟نجم الدین نے جواب دیا،میں کسی کو اپنے قابل

ایٹم بم ایک اشارہ ہی تو ہے ۔۔۔ تحریر : سید سردار احمد پیرزادہ

بچ جانے والے پاکستان کو محفوظ رکھنے کے لیے ایٹم بم بنانے کا فیصلہ کیا گیا۔ ذوالفقار علی بھٹو نے 20 جنوری 1972ء کو ملتان میں پاکستان کے چیدہ چیدہ سائنس دانوں کا اجلاس بلایا اور اُن کی توجہ اِس

لہو کے پیاسے مودی اور داخلی دشمنوں کی گوشمالی ضروری ہے ۔۔۔ تحریر : مقصود احمد سندھو ۔ چیچہ وطنی

انسانی خون کی پیاسی،مسلم دشمن اور اقلیتوں پر ظلم وبربریت برپاء کرنے کی شوقین ہندوستانی حکومت نے اپنے مکروہ عزائم کی تکمیل اور اپنی خون آشام فطرت کی تسکین کے لئے کشمیر میں ایک بار پھر نہتے،مجبوربے بس اورلاچار لوگوں

پولیس نے 48 گھنٹوں میں خواجہ سراؤں کے اندھے قتل کا سراغ لگا لیا۔

وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کے حکم کی بجا آوری کیا باقی کیسزمیں بھی پولیس اپنے اس معیارکوقائم رکھ پائے گی؟؟ ۔ چیچہ وطنی سے ۔۔۔ مقصود احمد سندھو کی کرائم ڈائری خواجہ سرا نادیہ اورخواجہ سرا مسکان کے بہمانہ

روحانی ڈاکٹر راجہ یحییٰ خالد

  جادو، جنات، سحر، آسیب، نظر بد اور تمام قسم کی بندش کا علاج قرآن و سنت سے تسلی بخش کیا جاتا ہے۔ اوقات ملاقات : شام 5 بجے سے رات 9 بجے تک گھر سے آنے سے پہلے فون

سمندر کے کنارے آباد ایک بستی ۔۔۔ تحریر : سید سردار احمد پیرزادہ

سمندر کے کنارے ایک بستی آباد تھی۔ بارشوں کا موسم تھا۔ سمندر اور بستی کی آبادی پر بوندیں ٹپ ٹپ گر رہی تھیں۔ آبادی کا ہر فرد اداس اور کمزور تھا۔ کھانے پینے کا سٹاک ختم ہوچکا تھا۔ کاروبار ٹھپ

نعتؐ شریف : زاہد توقیرؔ ۔ کمالیہ

سر یقین درودوں کا کارواں ٹھہرے تو تیرگی میں بھی روشن مرا مکاں ٹھہرے جو دیکھ پاؤں ترے در کی رحمت یکتا مری نگاہ زمانے میں پھر کہاں ٹھہرے رفیق جائیں کہاں چھوڑ کر تری قربت کہ تیرے در پہ

بکھرے لفظوں کی داستان ۔۔۔ تحریر : اسماء طارق ۔ گجرات

خدا نے ماں کو بڑی فکرمندی دی ہے یہی وجہ ہے کہ بانو قدسیہ نے لکھا ہے کہ اگر کسی ماں کے آٹھ بیٹے ہوں اور سات جنت میں داخل کر دیے جائیں اور ایک جہنم میں تو ماں جنت