فلم انڈسٹری کو بحالی کی راہ میں گامزن کرنے کا کریڈٹ صرف نوجوان نسل کو ہی جاتا ہے ۔ ایم افضل چوہدری

کمالیہ ( ہماری بات پاکستان ) چوہدری آرٹس سوسائٹی اینڈ کلچرل ونگ کے ایڈمنسٹریٹر ایم افضل چوہدری نے کہا ہے کہ فلم انڈسٹری کی بحالی کا کریڈٹ اب صرف نوجوان نسل کو ہی جاتا ہے۔ پاکستان فلم انڈسٹری کے بحران کی وجہ مستقبل کے لئے ماسٹر پلان کا تیار نہ کرنا تھا۔ گو کہ پاکستان میں وسائل اور محنتی لوگوں کی کمی نہیں ہے فلم انڈسٹری کو بحالی کی راہ پر گامزن کرنے کا کریڈٹ صرف نوجوان ٹیلنٹ کو ہی دیا جاتا ہے ہماری سوسائٹی کے قیام کی اولین ترجیحات میں فلم پروڈکشن میں نوجوان ٹیلنٹ کی حوصلہ افزائی کرنا ہے۔ اِنشاء اللہ جنوری2017کے پہلے ہفتہ میں ہی سوسائٹی ایک بار پھر نئے عزم اور جوش و ولولہ کے ساتھ دوبارہ ایک بار پھر منظر عام پر آ جائے گی۔ اور اس سلسلہ میں اس کا ایک غیر رسمی اجلاس اِنشاء اللہ 25دسمبر2016بروز اتوار کو رائل ایجوکیشنل کمپلیکس اینڈ لاء کالج میں منعقد ہو رہا ہے۔ جس میں سوسائٹی کی بحالی اور اس کے راستہ میں حائل رکاوٹوں کے تدراک اور خاتمہ کا نہ صرف عندیہ بلکہ آئندہ کے لائحہ عمل کا اعلان کیا جائے گا۔ انہوں نے مزید کہا کہ مکرو فریب ان سب مکروہ چہروں کو بہت جلد سوسائٹی ہذا سے فارغ کر کے ایک بار دوبارہ جدید خطوط پر سوسائٹی کی رونقیں نہ صرف بحال ہوں گی بلکہ ان جدید ترجیحات پر بھی از سر نو کام کا آغاز ہو گاجو کہ چوہدری آرٹس سوسائٹی اینڈ کلچرل ونگ کے منشور کا حصہّ ہے۔ اور ان سب کالی بھیڑوں کو جنہوں نے سوسائٹی کی بنیادوں کو دیمک کی طرح کھوکھلا کیا انہیں باہر نکال پھینکا جائے گا۔19اپریل2016تا19دسمبر2016کے عرصہ میں سوسائٹی نے بہت سے کٹھن مسائل اور مشکلات کا سامنا کیا۔ ان بد عنوان عناصر نے اس کی تنزلی کے لئے کوئی بھی دقیقہ فرو گزاشت نہ چھوڑا ۔ جو ادارہ ان کی پہچان کا وسیلہ تھا اس کو گرانے اور توڑنے اور اس کے راستہ میں روڑے اٹکانے اور اس پر کیچڑ اچھالنے او ر اسے ختم کرنے کے پے در پے رہے۔ اِنشاء اللہ جنوری2017کا سورج سوسائٹی ہذا کی نئی آب و تاب اور رعنائیوں کے ساتھ طلوع ہو گا۔ اور بہت جلد شوبز فیلڈ پر اجارہ داری کے نظام کے خاتمہ کے لئے ایک باقاعدہ لائحہ عمل ترتیب دیا جائے گا جس کے بعد فلم انڈسٹری ایک بار دوبارہ اپنی پوری آب و تاب کے ساتھ ماضی کی طرح حال اور مستقبل میں ایک بار پھر اپنے عروج کو دیکھے گی۔

(Visited 46 times, 1 visits today)

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *