کمالیہ نیوز

کمالیہ ( ڈاکٹر غلام مرتضیٰ ۔ ایڈیٹر ہماری بات پاکستان ) قائم مقام چیئرمین میونسپل چوہدری محمود الحسن جٹ سے رکشہ یونین کے مزاکرات کامیاب۔تفصیلات کے مطابق ٹریفک پولیس کی جانب سے شہر بے جا موٹر سائیکل رکشہ مالکان کے خلاف چالان کیے جارہے تھے جس کے باعث رکشہ ڈرائیور ز نے ہڑتال کر رکھی تھی اور احتجاج کر رہے تھے۔اس سلسلہ میں رکشہ یونین نے قائمقام چیئرمین میونسپل چوہدری محمود الحسن جٹ سے ان کے دفتر میں ملاقات کی اور ٹریفک پولیس کی جانب سے بے جا چالان کرنے پر نوٹس لینے کا مطالبہ کیا جس پر قائمقام چیئرمین میونسپل چوہدری محمود الحسن جٹ نے فوری طور پر ٹریفک پولیس کو ہدایات جاری کیں اور رکشہ یونین کو بھی کہا کہ میونسپل کمیٹی کے مقرر کردہ پوائنٹس کے علاوہ رکشوں کو کھڑا نہ کیا جائے کیونکہ یہ عمل ٹریفک کے بہاؤ میں دشواری کا باعث بنتا ہے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
کمالیہ ( ڈاکٹر غلام مرتضیٰ ۔ ایڈیٹر ہماری بات پاکستان ) کمالیہ بار، ججز اور وکلاء کے درمیان گلے شکوے ختم ،معاملات طہ پا گئے۔ ہڑتال ختم ،صلح میں ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج ٹوبہ ٹیک سنگھ نے اہم کردار ادا کیا ۔ تفصیلات کے مطابق کمالیہ بار ایسوسی ایشن کمالیہ سول جج کمالیہ اعجاز حسین کے نامناسب رویہ کے خلاف گذشتہ 2ہفتوں سے ہڑتال پر تھی۔ جس بناء پر معاملات شدت اختیار کر تے جا رہے تھے۔ جس پرڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج ٹوبہ ٹیک سنگھ ملک ساجد علی اعوان نے نے صورتحال کا نوٹس لیتے ہوئے بار ایسوسی ایشن کمالیہ کے عہدیداران سے رابطہ کیا اور دونوں فریقین کے درمیان گلے شکوے ختم کروا دیئے ۔ ڈسٹرکٹ اینڈسیشن جج ٹوبہ ملک ساجد علی اعوان دن 12بجے کے قریب ایڈیشنل سیشن جج چوہدری محمد جمیل ،سول جج کمالیہ اعجاز حسین اورطاہر منظور کے ہمراہ کمالیہ بار روم میں ایگزیکٹو کمیٹی کے اجلاس میں تشریف لائے اور دونوں فریقین کے درمیان کروا دی۔صلح ہونے پر بار ایسوسی ایشن کمالیہ نے ہڑتال ختم کرنے کا اعلان کر دیا۔ اس موقع پر ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج ٹوبہ ملک ساجد علی اعوان کا کہنا تھا کہ بار اور بینچ ایک ہی گھر کے دو افراد ہیں بعض اوقات ہمارے درمیان غلط فہمیاں پیدا ہو جاتی ہیں۔ جن کا حل ضروری ہے۔الیکشن کی مصروفیات اور چھٹی پرہونے کی بناء پر معاملات میں طوالت پیدا ہوئی۔اس موقع پر انہوں نے ہڑتال ختم کرنے پر کمالیہ بار کے عہدیداران کا شکریہ بھی ادا کیا۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
کمالیہ ( ڈاکٹر غلام مرتضیٰ ۔ ایڈیٹر ہماری بات پاکستان ) صحافیوں کو ساتھ لیکر چلنا چاہتا ہوں، مسائل کی نشاندہی میں میڈیا کا اہم کردار ہے۔ ان خیالات کا اظہار اسسٹنٹ کمشنر کمالیہ راناشاہد ندیم نے پریس کلب کمالیہ و الیکٹرانک میڈیا کے وفد سے ملاقات کے دوران خصوصی گفتگوکرتے ہوئے کیا وفد کے ارکان میں پریس کلب کمالیہ کے صدر سردار عبدالرحمن ڈوگر،جنرل سیکرٹری محمد حسین عابد،الیکڑانک میڈیا کے سیکرٹری جنرل عمران شاہد، عدنان اشرف اورسینئر صحافی پیر یوسف بخاری شامل تھے۔ اسسٹنٹ کمشنر کمالیہ کامزید کہناتھا کہ صحافی معاشرے کی آنکھ اور کان ہوتے ہیں۔ معاملات کی درست رپورٹنگ صحافیوں کی ذمہ داری ہوتی ہے۔معاشرے میں مسائل کی نشاندہی میں صحافیوں کا اہم کردار ہوتا ہے۔ شہر کی بہتری کیلئے کمالیہ کے تمام صحافیوں کو ساتھ لیکر چلنا چاہتا ہوں۔ اس موقع پر ڈپٹی ڈسٹرکٹ ایجوکیشن آفیسر تنویر احمد غزالی اور اسسٹنٹ ایجوکیشن آفیسر بھی موجود تھے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
کمالیہ ( ڈاکٹر غلام مرتضیٰ ۔ ایڈیٹر ہماری بات پاکستان ) ضلع ٹوبہ ٹیک سنگھ کے اساتذہ ان سروس پرموشن سے محروم ،بار بار توجہ دلانے کے باوجود

DPC منعقد نہ ہوسکی، ڈپٹی کمشنر ٹوبہ ٹیک سنگھ سے ان سروس پرموشن کیلئے DPC کی میٹنگ مقرر کرنے کی استدعا۔ تفصیلات کے مطابق پنجاب بھر کے مختلف اضلاع میں اساتذہ کو ان سروس پرموشن مل چکی ہے۔ مگرٹوبہ ٹیک سنگھ میں PSTاساتذہ کے ساتھ امتیازی سلوک برتا جا رہا ہے۔ یکم جنوری 2011 سے اساتذہ کو ان سروس پرموشن نہیں دی گئی۔حالانکہ متعدد بار اساتذہ سے پرموشن کیلئے فائلیں جمع کی گئی اور سنیارٹی لسٹ مرتب ہو چکی ہے مگر اس کے باوجود ڈسٹرکٹ پروموشن کمیٹی کی میٹنگ منعقد نہ ہو سکی۔اس سلسلہ میں سیکرٹری سکول پنجاب کی جانب سے CEO ٹوبہ کی واضع ہدایات بھی موجود ہیں کہ ہر ماہ کی 4 تاریخ کو DPCمقرر کرکے اساتذہ کو پرموشن دی جائے لیکن اس کے باوجود ایک بار بھی اس حکم پر عملدرآمد نہیں ہوا۔اس سلسلہ میں پنجاب ٹیچر ز یونین ٹوبہ ٹیک سنگھ کے عہدیداران کا کہنا ہے کہ ہم نے متعدد بار تحریری طور پرڈسٹرکٹ ٹوبہ ٹیک سنگھ کے افسران کو DPC کی میٹنگ مقرر کرنے کیلئے استدعا کی لیکن ہر بار DPC  کمیٹی کی تاریخ مقرر ہونے کے باوجودمیٹنگ ملتوی کر دی جاتی ہے۔اس سلسلہ میں ڈپٹی کمشنر ٹوبہ ٹیک سنگھ کو درخواست بھی گزاری گئی ہے ۔پنجاب یونین ٹوبہ کے عہدیداران نے ڈپٹی کمشنر ٹوبہ کو DPCمقرر کرکے اساتذہ کو ان سروس پرموشن دینے کی استدعا کی ہے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
کمالیہ ( ڈاکٹر غلام مرتضیٰ ۔ ایڈیٹر ہماری بات پاکستان ) ہمیشہ اپنی پارٹی کے ساتھ مخلص رہا، میرے لیے ہار اور جیت کوئی معانی نہیں رکھتی، موجودہ الیکشن پاکستان کے تاریخ کے دھاندلی زدہ الیکشن تھے، ریکارڈ دھاندلی ہوئی۔ ان خیالات کا اظہار پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما سابق MNAمیاں اسدا لرحمن نے نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انکا مزید کہناتھا کہ 1974 ؁ء سے سیاست میں ہوں ہر الیکشن مسلم لیگ کے پلیٹ فارم سے لڑا ہے۔ کئی بار جیتا کئی بار ہارا ہوں ۔میرے لیے ہار جیت کوئی معنی نہیں رکھتی ۔متعدد بار مجھے ذمہ داریاں تبدیل کرنے کے عوض پر کشش عہدوں کی آفرز ہوئی ہیں مگر میں نے ٹھکرا دی۔موجودہ الیکشن پاکستان کی تاریخ کے دھاندلی زدہ الیکشن تھے۔ ROنے رزلٹ تبدیل کیے اداروں نے عوام کا مینڈیٹ چوری کرکے لاڑلے کو دے دیا۔

(Visited 10 times, 1 visits today)

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *