کمالیہ : 14 اگست یومِ آزادی کی رنگا رنگ تقاریب کا انعقاد

کمالیہ ( ڈاکٹر غلام مرتضیٰ ۔ ایڈیٹر ہماری بات پاکستان ) قوم کو کرپٹ حکمرانوں سے آزادی دلوانے میں عوامی تحریک کا بنیادی کردار ہے،ملک پاکستان کی ترقی اور بقاء کیلئے ملک کے ہر شخص کو اپنا کردار ادا کرنا ہوگا،پاکستان کی نظریاتی اور جغرافیاتی سرحدوں کی حفاظت ہمارافرض ہے۔ان خیالات کا اظہار پاکستان عوامی تحریک کے رہنما سٹی صدر سجاد مسعود چشتی نے ہمارے نمائندہ سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کیا انکا مزید کہناتھا کہ قوم کو کرپٹ حکمرانوں سے آزادی دلوانے میں عوامی تحریک کا بنیادی کردار ہے۔علامہ ڈاکٹر طاہرالقادری نے ن لیگ کی حکومت کے خلاف اس وقت الم جہاد بلند کیا جب ملک میں ن لیگ کا طوطی بولتا تھا اور کوئی بھی جابر حکمران کے سامنے کلمہ حق کہنے کیلئے تیار نہیں تھا۔ایسی صورتحال میں عوامی تحریک کے نہتے کارکنان نے ماڈل ٹاؤن میں سینے پر گولیاں کھا کر جام شہادت نوش کیا۔ہم نے یہ سب کچھ اس لیے کیا کہ پاکستان ہمارے آباؤ اجداد کی قربانیوں کاصلہ ہے ۔ملک کی ترقی اور بقاء کیلئے ہر مسلمان کو اپنا کردار ادا کرنا ہے ۔پاکستان کو اپنا گھر سمجھتے ہوئے اسکی نظریاتی اور جغرافیاتی سرحدوں کی حفاظت ہم پر فرض ہے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
کمالیہ ( ڈاکٹر غلام مرتضیٰ ۔ ایڈیٹر ہماری بات پاکستان ) پولیس افسران کی جانب سے شجر کاری مہم کا آغاز۔DSPکمالیہ عظمت اللہ اور SHOصدر نے اپنے دفاتر میں پودے لگائے۔پریس کلب کمالیہ والیکٹرانک میڈیا اور فالکن گروپ کے اراکین بھی ہمراہ تھے۔تفصیلات کے مطابق پورے ملک میں شجر کاری مہم زورو شور سے جاری ہے۔اس سلسلہ میں مختلف شہری تنظیموں اور اداروں کی جانب سے پہلی دفعہ شجر کاری مہم میں غیر معمولی دلچسپی دیکھنے کو مل رہی ہے۔شجر کاری مہم کے سلسلہ میں محکمہ پولیس کے افسران اور ملازمین نے حصہ لیاہے جس کے تحتDSPکمالیہ عظمت اللہ خان نے اپنے آفس کے صحن میں جشن آزادی کے موقع پر پودے لگا کر شجر کاری مہم کا آغاز کیا جبکہ تھانہ صدرکمالیہ میں SHO انویسٹیگیشن حاجی عدالت علی نے پودا لگا یا۔ اس موقع پر فالکن گروپ کے عہدیداران وممبران اورپریس کلب کمالیہ والیکٹرانک میڈیا کے اراکین بھی موجود تھے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
کمالیہ ( ڈاکٹر غلام مرتضیٰ ۔ ایڈیٹر ہماری بات پاکستان ) سلطنت پاکستان ہمیں کسی نے تحفے میں نہیں دیا۔ ہمارے آبا ؤ اجداد نے اپنی جائیدادوں،جانوں اور عزتوں تک کی قربانیاں دیکر پاکستان حاصل کیا۔سلطنت پاکستان ہمیں کسی نے گفٹ نہیں کیا تھا، اس کے حاصل کرنے میں ہمارے آبا ؤ اجداد نے اپنے رزق، اپنی جائیدادوں،اپنی جانوں اور اپنی عزتوں تک کی قربانی دی تھی۔ تب جا کر پاکستان کا منہ دیکھنا نصیب ہوا تھا۔ ان خیالات کا اظہار صدر ابوالفیصل محمد حسین نظامی کر رہے تھے۔انہوں نے مزید کہا کہ 14اگست کے دن کی خوشی اپنی جگہ لیکن یہ دن ان شہیدوں کو یاد کرنے کا دن ہے۔ جنہوں نے اپنی جان،مال،عزت تک کی پرواہ نہ کی اور محترم قائد اعظم جناب محمد علی جناح کا بھرپور ساتھ دیکر مملکت پاکستان کی آزادی کو ممکن بنایا۔ بہت دکھ اور رنج ہوا پوری پاکستانی قوم کو جب ایک محترم سیاسی و مذہبی شخصیت نے اپنی شکست کا بدلہ ہمارے وطن عزیز اور ہماری افواج پاکستان کے خلاف ہمارے دشمنوں کی زبان میں بد زبانی کر کے لیا، آج سے ستر سال قبل ان ہی کے والد محترم نے ارشاد فرمایا تھا۔ کہ شکر ہے ہم پاکستان بنانے کے گناہ میں شامل نہیں ہوئے اورہمارے وطن عزیز کے بانی جناب قائد اعظم محمد علی جناح کو قائد اعظم کی بجائے کافر اعظم کے لقب سے نوازا، ان محترم حضرات کو پناہی بھی اسی سلطنت نے دی۔ عرصہ دراز تک وفاقی وزیر کے درجے پر رہ کر اسی سلطنت کو کھاتے رہے۔ بس اک دفعہ کیا ہارے کہ سارے کا سارا نمک ہی حرام کردیا۔ کتنی عظیم شخصیت سمجھتے تھے ہم ان کو انا للہ وانا الیہ راجعون۔ہم سب کو 14اگست کادن بھرپور طریقے سے خوشیوں کے ساتھ منانا ہوگا۔ہمیں اپنے ملک کے سب اداروں کے ساتھ اور بالخصوص افواج پاکستان کے ساتھ یک جہتی کا اظہار کرناہوگا اور سلطنت پاکستان کے شہیدوں کوخراج تحسین پیش کرتے ہوئے قرآن خوانی کا بھی اہتمام کرنا ہوگا۔ ربناکریم سلطنت پاکستان کو ہر دشمن کی سازش سے، دشمنوں کے ناپاک ارادوں سے اور ہر منافقت رکھنے والے فراد کی منافقت سے محفوظ رکھے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
کمالیہ ( ڈاکٹر غلام مرتضیٰ ۔ ایڈیٹر ہماری بات پاکستان ) کمالیہ لیڈیز پارک میں آشفہ ریاض نے شجر کاری مہم کے سلسلہ میں پودا لگا یا۔محمود جٹ،رائے ضیاء اللہ،سید اکبر علی ،صدیق کھٹانہ،میاں ریاض اورپریس کلب کے اراکین بھی موجود تھے۔ تفصیلات کے مطابق نو منتخب ممبر صوبائی اسمبلی آشفہ ریاض فتیانہ نے ملک میں جاری شجر کاری مہم کے سلسلہ میں قائمقام چیئرمین محمود الحسن جٹ کی دعوت پر محلہ بہلول والا لیڈیز پارک میں اپنے ہاتھ سے پودا لگا کر شجر کاری مہم کا آغاز کیا اس موقع پر انکے ہمراہ رائے ضیاء اللہ خان ،سید اکبر علی صدر مرکزی انجمن تاجران کمالیہ ،میاں ریاض احمد ڈھڈی ،پرائیویٹ سکولز ایسوسی ایشن کے ضلعی صدر جمیل احمد آرائیں،پریس کلب کمالیہ کے چیئرمین چوہدری محمد امین، صدر سردار عبدالرحمن ڈوگر، جنرل سیکرٹری محمد حسین عابد،سینئر نائب صدر ملک عابد اسلم ،چیئرمین الیکٹرانک میڈیا ،اکرم شاہین ،جنرل سیکرٹری عمران شاہد ، ڈپٹی جنرل سیکرٹری پریس کلب کمالیہ محمد جاوید قادری اور سیاسی ایڈیشن کمالیہ کے بیورو چیف منظور انصاری،قاری محمد سعید تحصیل رپورٹر روزنامہ دن، شبیر احمد ،اقبال بھٹی ،آفتاب سیال،انصاری جی اوردیگران بھی موجود تھے۔ اس موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے نو منتخب ممبر صوبائی اسمبلی آشفہ ریاض کا کہناتھا کہ صحت مند آب وہوا کیلئے ملک میں شجر کاری ضروری ہے،ہر شخص اپنے حصیّ کا پودا لگائے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
کمالیہ ( ڈاکٹر غلام مرتضیٰ ۔ ایڈیٹر ہماری بات پاکستان ) آزادی مساوی انسانی حقوق اور معاشرتی ناہمواریوں کے خاتمے کا نام ہے۔بد قسمتی سے 70سال گزر جانے کے باوجود ہم حقیقی آزادی سے محروم ہیں۔حقیقی آزادی کے ثمرات سے لطف اندوز ہونے کیلئے انسانی حقوق کے تحفظ اور انصاف کے قوانین لاگو کرنا ہونگے۔ان خیالات کا اظہار معروف نوجوان رہنماچیئرمین ہیومن رائٹس کمیٹی لاہور ہائیکورٹ بارسید کاظم علی نے ہمارے نمائندہ سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کیا انکا مزید کہناتھا کہ پاکستان اسلامی فلاحی اور جمہوری ریاست کے قیام کیلئے معرض وجود میں آیا تھا۔مگر 70سال کا عرصہ گزر جانے کے باوجود نہ تو ہم اس ملک کو فلاحی ریاست بنا سکے اور نہ ہی جمہوری قدروں میں خاطر خواہ اضافہ ہوا۔حقیقی آزادی مساوی انسانی حقوق اور معاشرتی ناہمواریوں کا نام ہے۔جب تک ہمارے معاشرے میں عدل و انصاف اور مخلص قیادت نہیں ہو گی تب تک ہم حقیقی آزادی کے ثمرات سے لطف اندوز نہیں ہو سکتے۔حقیقی آزادی کے ثمرات سے لطف اندوز ہونے کیلئے انسانی حقوق کے تحفظ اور انصاف کے قوانین لاگو کرنا ہونگے ۔قوانین میں ترمیم کرنا ہوگی ۔خوش قسمتی سے موجودہ انتخابات میں قوم کو عمران خان جیسا لیڈر مل چکاہے۔امید ہے اب پاکستان ترقی کی راہ پر گامزن ہوگا۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

(Visited 47 times, 1 visits today)

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *