اوباش نوجوان نے لڑکی کی تصویریں بناکر بلیک میل کرنا شروع کردیا

ہڑپہ (کرائم رپورٹر) تھانہ ہڑپہ کی حدود میں واقع چک نمبر
2/10L
عباس پور میں غریب لوگ عدم تحفظ کاشکار .عزتیں غیر محفوظ اوباش نوجوان نے لڑکی کی تصویریں بناکر بلیک میل کرنا شروع کردیا اعلیٰ حکام سے نوٹس کا مطالبہ۔

2/10L
کے رہائشی سعید عرف سیدو ولد احمد نے اپنے ہی گاؤں کے رہائشی نواز کی 13سالہ بیٹی کو ویڈیو ریکارڈ کر کے اور تصویریں بنا کر بلیک میل کرنا شروع کردیا ۔

غریب کے گھر بیٹی کا پیدا ہونا جرم بن گیا اوباش نوجوان نے غریب محنت کش کی بیٹی کی تصویریں کھینچ کر انٹرنیٹ پر اپ لوڈ کر دی ۔ متاثرین سراپا احتجاج

گاؤں کا اوباش نوجوان سکول جاتے ہوئے میرا رستہ روک کر مجھے تنگ کرتا تھا، متاثرہ لڑکی کا بیان۔

اب میں اپنی امی ابو کے ساتھ لوگوں کے کھیتوں میں محنت مزدوری کرنے جاتی ہوں تو یہ ہمیں بلیک میل کرکے تنگ کرتا ہے،

میں گورنمنٹ گرلز ایلیمنٹری سکول
2/10L
میں ساتویں کلاس میں پڑھتی تھی اور مزید پڑھنا چاہتی تھی اس لڑکے سے خوف زدہ ہوکر اپنی اور اپنے والدین کی عزت بچانے کی خاطر سکول ہی چھوڑ دیا ہمیں انصاف اور تحفظ دیا جائے۔ متاثرہ لڑکی کی اعلیٰ حکام سے فریاد۔

یہ لوگ بااثر ہیں مجھے اپنے پاس بلوا کر میری بیٹی کی تصویریں دکھائیں چپ نہ رہنے کی صورت میں سنگین نتائج کی دھمکیاں بھی دیں، والد کا بیان ۔

ہم غریب لوگ ہیں ہماری بچیوں کی زندگیاں اور عزتیں ان حالات میں غیر محفوظ ہیں ہمیں انصاف اور تحفظ فراہم کیا جائے ۔
لڑکی کے والد نے انصاف اور تحفظ کے لیے تھانہ ہڑپہ میں درخواست دے دی جس پر تاحال کوئی کاروائی نہ ہوسکی۔

(Visited 18 times, 1 visits today)

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *