Tag Archives: مسز جمشید خاکوانی

جس دن عمران خان نے خود کو سیاستدان سمجھا ۔۔۔ تحریر : مسز جمشید خاکوانی

ایک مولوی صاحب روزانہ ندی پار کر کے ایک مسجد میں نماز پڑھانے جاتے اور واپس ندی پار کر کے اپنے گھر جاتے ایک دیہاتی آدمی نے دیکھا مولوی صاحب ندی کے پانی پر ایسے چلتے ہوئے جاتے جیسے خشکی

کس کس کو سمجھائیں ۔۔۔ تحریر : مسز جمشید خاکوانی

آجکل میرا حال بالکل عمران خان جیسا ہو گیا ہے ا س کو بھی بیوی اور ٹی وی سے پتہ چلتا ہے اس کی حکومت آ گئی ہے مجھے بھی کوئی نہ کوئی روزانہ میسج کر کے یہ یاد دلاتا

مسٹر زرداری ، پاکستان پر بھاری ۔۔۔ تحریر : مسز جمشید خاکوانی

ضیا شاہد صاحب کا تاریخی تجزیہ پڑھنے کو ملا ’’احتساب میں پھنسے زرداری کا سندھ کارڈ کھلم کھلا بلیک میلنگ ہے ‘‘اس میں شک بھی کیا ہے چند دن پہلے زرداری کے اباجی حاکم علی زرداری کی ایک وڈیو دیکھی

سانحہ آرمی پبلک اسکول اور انتظارکرتی مائیں ۔۔۔ تحریر : مسز جمشید خاکوانی

ان شہیدوں کے کی ماؤں کے چہروں پر خوشی کی کوئی رمق نہیں تھی نم آنکھیں، لرزتے ہونٹ،کھوئی کھوئی سی یہ مائیں ان شہیدوں کی مائیں تھیں جو آرمی پبلک اسکول میں انتہائی بے دردی سے شہید کیے گئے تھے

عمران خان میں اخلاقی جرات کی کمی نہیں ۔۔۔ تحریر : مسز جمشید خاکوانی

مسلہ یہ ہے وہ اداروں کو کھڑا ہونے میں مدد دے رہے ہیں اس لیے وہ ان میں مداخلت نہیں کرتے ،وہ ایک بیان دیتے ہیں اور اپوزیشن میں صف ماتم بچھ جاتی ہے سات دن بعد ایک اور بیان

جب احساس ہی مر جائے ۔۔۔ تحریر : مسز جمشید خاکوانی

جب چوٹ لگتی ہے درد کا احساس ہوتا ہے کسی میں برداشت زیادہ ہوتی ہے کسی میں کم ،سچ پوچھیں تو مجھ میں درد برداشت کرنے کی صلاحیت بالکل نہیں ہے نہ میں کسی کو درد میں دیکھ سکتی ہوں

مایوسی کیوں گناہ ہے ۔۔۔ تحریر : مسز جمشید خاکوانی

میں ایک شخص کی کہانی پڑھ رہی تھی وہ لکھتا ہے میرے بہنوئی کا چچازاد جس کا نام جمیل خان تھا پیدائشی دماغی طور پر کمزور تھا شروع میں تو گھر والے اس کی کیفیت سمجھ نہیں پائے لیکن جب

انسان درندے کیوں بن جاتے ہیں ۔۔۔ تحریر : مسز جمشید خاکوانی

وہ شخص بڑے اطمنان اور مزے سے اپنے جرم کی کہانی بیان کر رہا تھا اس کے ہاتھوں میں ہتھکڑی لگی تھی ایک سپاہی ہتھ کڑی پکڑے قریب ہی موجود تھا شائد اینکر کے اصرار پر اسے لایا گیا تھا

اس ایوان میں سب ننگے ہیں ۔۔۔ تحریر : مسز جمشید خاکوانی

بڑے ڈیسک بجائے جا رہے تھے جب خورشید شاہ کہہ رہے تھے کہ مشرف کے سارے ساتھی آج کدھر بیٹھے ہیں جناب سپیکر ٓج بھی نون لیگ کے کتنے نام گنواؤں جو چودھری پرویز الہی کے گھر کے باہر لائن

جہالت اور شعور کی جنگ میں جیتے گا کون ۔۔۔ تحریر : مسز جمشید خاکوانی

آجکل جس کو دیکھو وہ مائیک پکڑے جگہ جگہ لوگوں سے ایک ہی سوال کرتا نظر آتا ہے ووٹ کس کو دے رہے ہو ؟۔ جواب میں کوئی پی ٹی آئی کی محبت میں مبتلا نظر آتا ہے تو کوئی