تمھارے بعد ۔۔۔ تحریر : عالیہ جمشید خاکوانی

تمھارے بعد کیا رکھتے کسی سے واسطہ
تمھاری بے رخی نے ہمیں برف کر ڈالا
دیکھو ہم نہ کہتے تھے وقت ظالم ہے                                            .
بھلا دیا تمہیں بھی،وقت نے یہ اثر ڈالا                                            .
واسطوں سے بھلا کب تعلق بنتے ہیں
یہ احساس بھی دل میں عمر بھر ڈالا
یہ چہرہ اب کبھی نہ دکھائی دے گا تجھے                                           .
جدائی  کی آگ نے  خاکستر کر ڈال                                                 .
محبت پلان تھوڑی ہے کہ سوچو اور کرو
یہ وہ خیال ہے ،جو من میں آیا اور کر ڈالا

(Visited 53 times, 1 visits today)

One Response to تمھارے بعد ۔۔۔ تحریر : عالیہ جمشید خاکوانی

  1. Hello, I wish for to subscribe for this blog to obtain hottest updates, so where
    can i do it please help out.

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *