حلقہ ارباب ذوق کا رواں سیشن کا 27 واں اجلاس پاک ٹی ہاؤس لاہور میں منعقد ہوا۔

اتوار،30 ستمبر 2018، کی شام حلقہ اربابِ ذوق ،لاہور،رواں سیشن کا 27 واں اجلاس سیکرٹری حلقہ عقیل اختر اور جوائنٹ سیکرٹری بابرریاض نے پاک ٹی ہاؤس، لاہور میں منعقد کرایا جس کی صدارت ریاض احمد نے کی۔بابر ریاض کی پیش کردہ گزشتہ اجلاس کی کاروائی کی توثیق کے بعد صاحبِ صدارت نے اجلاس کا باقاعدہ آغاز کیااورعاطف جاوید عاطف کو اپنی غزل پیش کرنے کی دعوت دی جس کا مطلع یوں تھا’’ہم ہی شب پہ نہ ہم پہ رات کُھلی۔۔چشمِ حیرت پہ فلکیات کُھلی‘‘۔ غزل کے بعد پیش کی گئی تخلیقات میں قاضی ظفراقبال کا افسانہ ’’بَھلے مانس‘‘ اورنیازت علی نیاز کی نظم ’’حلقے میں تنقید کی خاطر‘‘ شامل تھیں۔تینوں تخلیقات پر حاضرین کی طرف سے بھرپور تنقیدی گفتگو کی گئی اور مجموعی طور پر کامیاب قراردیا گیا۔ گُفتگو میں حصہ لینے والوں میں علی اصغرعباس، ڈاکٹر امجد پرویز، قاضی ظفراقبال، جاوید انور، حمیدرازی، عقیل اختر،آدم شیر،میاں شہزاد، سجاد جعفری، شاذیہ مفتی، راشد طفیل،آفتاب خان، کامران ناشط، حبیب چوہان، جاوید قاسم، سہیل یار، حیدر عدیل، سہیل ممتاز، واصف اختر، مشتاق قمر، کامران نذیر، عاطف جاوید عاطف ، مزمل بٹ، عمیر صادق، شمریز خان، طلحہ ، عتیق اللہ وغیرہ شامل تھے۔ اِس تنقیدی اجلاس میں شاعروں، ادیبوں اور حلقہ کے ممبران کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔ آخر میں حال ہی میں اِس دارِ فانی سے کُوچ کر جانے والی شاعرہ عینی راز اورفکشن رائٹرسعید شیخ کے لیے فاتحہ خوانی کی گئی جس کے بعد سیکرٹری حلقہ نے صاحب صدارت ، تخلیق کاروں اورحاضرین سے اظہارِتشکر کیا جس کے ساتھ ہی یہ تنقیدی اجلاس اختتام پذیر ہو گیا۔

(Visited 15 times, 1 visits today)

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *